spot_img

Columns

Columns

News

آئرش وزیراعظم نے فلسطین کو بطور ریاست تسلیم کرنے کا اعلان کر دیا

آئرلینڈ نے فلسطین کو بطور ریاست تسلیم کرنے کا اعلان کر دیا، ناورے اور سپین بھی فلسطین کو بطور ریاست تسلیم کر رہے ہیں جبکہ اسرائیل نے فوری طور پر آئرلینڈ اور ناروے سے اپنے سفیروں کو واپس بلا لیا ہے۔

سینیٹر فیصل واوڈا نے سینیٹ میں جسٹس اطہر من اللّٰہ کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کر دیا

جج اطہر من اللّٰہ نے مجھے پراکسی کہا، ایک جج کیسے یہ جرأت کر سکتا ہے کہ وہ سینیٹر کو پراکسی کہے؟ جج نے ایوان کی توہین کی ہے، میں سینیٹ سے اطہر من اللّٰہ کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کرتا ہوں، سینیٹر فیصل واوڈا۔

عالمی عدالتِ انصاف نے بنجمن نیتن یاہو اور یحییٰ سنوار کے وارنٹ گرفتاری طلب کر لیے

عالمی عدالتِ انصاف (آئی سی سی) نے اسرائیلی وزیراعظم بنجمن نیتن یاہو، اسرائیلی وزیرِ دفاع یوو گیلنٹ اور حماس راہنماؤں یحییٰ سنوار، محمد دیاب المصیری و اسماعیل ہنیہ کے وارنٹ گرفتاری طلب کر لیے۔

ایرانی صدر ابراہیم رئیسی ہیلی کاپٹر حادثے میں جاں بحق ہو گئے

ایرانی صدر ابراہیم رئیسی کا ہیلی کاپٹر ایرانی علاقہ آذربائیجان میں گر کر تباہ، حادثہ میں ایرانی صدر، وزیرِ خارجہ حسین امیر، مشرقی آذربائجان کے گورنر ملک رحمتی اور صوبہ میں ایرانی صدر کے نمائندے آیت اللہ علی سمیت تمام افراد جاں بحق ہو گئے۔

وزیرِ اعلٰی پنجاب مریم نواز شریف نے ’’نواز شریف آئی ٹی سٹی‘‘ کا سنگ بنیاد رکھ دیا

وزیر اعلٰی پنجاب مریم نواز شریف نے پاکستان کے پہلے انفارمیشن ٹیکنالوجی منصوبے ’’نواز شریف آئی ٹی سٹی‘‘ کا افتتاح کر دیا۔ آئی ٹی سٹی کا نام نواز شریف کے نام پر رکھا گیا ہے کیونکہ نواز شریف ہی جدید پاکستان کے بانی ہیں۔
Opinionاسحاق ڈار پاکستان کا بہترین وزیر خزانہ کیوں؟
spot_img

اسحاق ڈار پاکستان کا بہترین وزیر خزانہ کیوں؟

Ahmad Jawad
Ahmad Jawad
Ahmad Jawad is the former Information Secretary for the Pakistan Tehreek-i-Insaf. He has represented Pakistan at a number of international forums alongside Imran Khan, CJ Ather Minullah, Ahsan Iqbal, Najam Sethi, and others. Jawad has also previously been an anchorperson for PTV.
spot_img

آئ ایم ایف کی روپے کو گرانے کے مطالبات ماننے سے انکار کر دیا، تین سال کا پروگرام آئ ایم ایف کا پہلا پروگرام تھا جو کامیابی سے مکمل ہوا اور پہلی دفعہ شرائط پاکستان کی حکومت نے منوائ جس کے نتیجے میں روپیہ لگاتار ساڑھے تین سال تک ڈالر کے مقابلے میں مستحکم رہا۔جس دن اسحاق ڈار کو وزیر خزانہ کا عہدہ ایک خاص ماحول میں دباؤ کے تحت چھوڑنا پڑا، اس دن سے لیکر آج تک روپیہ 105 سے 190 روپے پر پہنچ گیا۔

یاد رکھیں آئ ایم ایف کا سب سے بڑا ٹارگٹ کسی بھی ملک کی کرنسی کو گرانا مقصود ہوتا ہے، دنیا میں کسی بھی ملک کی کرنسی ڈالر کے مقابلے میں اگر گرے، اُسکا فائدہ امریکہ کو ہوتا ہے کیونکہ ڈالر امریکہ کی کرنسی ہے۔امریکہ کی برتری کا انحصار ڈالر کی مضبوطی اور دوسروں کی کرنسی کو گرانے میں ہے، اور اس کام کی ذمہ داری آئ ایم ایف کو دی گئی ہے اور اس کام کیلئے “اکنامک ہٹمین” پوری دنیا میں پھیلا دئیے گئے ہیں اور یہ حکومتوں کے اندر معاشی ایکسپرٹ کے طور پر موجود ہوتے ہیں۔اسحاق ڈار کا قصور یہ تھا کہ وہ “اکنامک ہٹمین” کے کرداروں کو ناکام بنا دیتا ہے،

اسحاق ڈار اس بات کے گواہ ہیں کہ اُنھیں ملک کے اندر اور باہر کرنسی گرانے کیلئے کتنے دباؤ کا سامنا تھا لیکن انھوں نے زبردست سٹینڈ لیا اور آئ ایم ایف کے پروگرام سے نکل جانے کی دھمکی دی، تاریخ میں مہاتیر نے بھی نوے کی دہائ میں اسی طرح کا سٹینڈ لیا تھا اور کامیاب رہا۔

اس بات کا قوی امکان ہے کہ آئ ایم ایف کے در پردہ قوتوں نے اسحاق ڈار کو نشانہ بنایا گیا تاکہ پاکستانی روپے کو گرایا جاسکے، اس بات کا ثبوت یہ ہے کہ پاکستانی روپیہ اسحاق ڈار کے وزیر خزانہ ہوتے ہوۓ 105 پر تھا اور اسحاق ڈار کے جاتے ہی روپیہ گرنا آج تک بند نہیں ہوا اور اب 190 پر ہے۔

آئ ایم ایف کے در پردہ ملکی اور غیر ملکی قوتوں نے نا صرف اسحاق ڈار کی وزیر خزانہ سے چھٹی کروائ بلکہ ان کے خلاف ایسے اقدامات کیے گئے کہ وہ پاکستان چھوڑ دیں اور واپس نا آئیں۔

آج بھی اگر اسحاق ڈار کو واپس وزیر خزانہ لایا جاۓ تو وہ پاکستانی روپے کواستحکام دلا سکتے ہیں۔

اسحاق ڈار کو پاکستان کے چند بہترین وزیر خزانہ میں شمار کیا جا سکتا ہے،اس کا ثبوت یہ ہے کہ 2017 میں پاکستان کی معیشت کی صورتحال کچھ یوں تھی

زر مبادلہ کے ذخائر – 20 ارب ڈالر
جی ڈی پی گروتھ – 6.1
لوڈُ شیڈنگ- زیرو
افراط زر- 4 فیصد
مہنگائ- عام اشیا آج سے چار گنا سستی
سٹاک ایکسچیج- ایشیا کے ٹاپ تین مارکیٹس میں شمار

اسحاق ڈار کو جب پتہ چلا کہ آلو کی ساری فصل ذخیرہ کر لی گئی ہے اور آلو کی قیمت بڑھ رہی ہے، انہوں نے فورا ٹیکس ختم کرکے آلو درآمد کیا اور ذخیرہ اندوزوں کو آلو مارکیٹ میں لانا پڑا. یہی سٹرٹیجی اُنہوں نے دوسری اشیا صرف میں اختیار کی اور قیمتوں کو کنڑول میں رکھا۔

اسحاق ڈار مہنگائ کے حوالے سے بھی بہت کامیاب تھے، مارکیٹ مانیٹرنگ اتنی سخت تھی، کہ ذخیرہ اندازی سے پہلے ہی خبر آ جاتی تھی اور اسے کنٹرول کرنے کیلئے اقدامات اُٹھا لیے جاتے تھے، چینی،گھی، دالیں،آٹے کی قیمت کنٹرول میں رہی، اگر کسی کو یقین نہیں آتا، 2013-2018 تک بنیادی اشیاۓ ضرورت کی قیمت چیک کر لیں اور آج کی قیمتیں بھی چیک کر لیں

اسحاق ڈار نے چینی کی برآمد کی اجازت نہیں دی جو کے پی ٹی آئ کے دور میں دی گئی اور پھر سب نے دیکھا کہ چینی کی قیمت کدھر گئی۔

اسحاق ڈار جیسے وزیر خزانہ ہی پاکستان کی ضرورت ہے جو آج بھی پاکستان کی بدترین معاشی صورتحال کو سنبھال سکتے ہیں۔

اسحاق ڈار پر پی ٹی آئ کی حکومت نے الزام لگایا کہ وہ مصنوعی طریقے سے روپے کی قدر کو برقرار رکھتے تھے، یعنی ہر مہینے دو ارب ڈالر مارکیٹ میں پھینکتے تھے، اس حساب سے 43 ماہ میں پی ٹی آئ کے پاس 86 ارب ڈالر اکھٹے ہو جانے چاہیے تھے؟

پاکستان کی 70 سالہ تاریخ میں بیس ہزار میگا واٹ بجلی پیدا کی گئی، اور 2013 میں ملک میں اوسط 14 گھنٹے لوڈ شیڈنگ ہوتی تھی، اور نواز شریف کی حکومت نے پانچ سال میں 10000 میگا واٹ بجلی پیدا کی

نیازی اور نواز شریف میں ایک بڑا فرق یہ ہے کہ نواز شریف نے معیشت پاکستان کا مفاد مد نظر رکھ کر چلائ اور اسحاق ڈار نے “اکنامک ہٹمین” کو پاکستان میں چلنے نہیں دیا، جبکہ عمران نیازی نے اپنی معیشت “اکنامک ہٹمین” کے حوالے کر دی۔حفیظ شیخ، باقر رضا، شوکت ترین نے پاکستان کی معیشت کو تباہ کر دیا۔

شاید اگلے ھفتے پاکستان کا وزیر خزانہ ایک دفعہ پھر اسحاق ڈار ہوگا، اور پاکستان کی آخری سانسیں لیتی معیشت کو آکسیجن اسحاق ڈار ہی دے گا، ساڑھے تین سال کا نیازی تجربہ اپنے انجام کو پہنچ گیا، اب ایک دفعہ پھر مسلم لیگ ن کو پاکستان کو بچانا ہو گا، اُمید ہے احسن اقبال سی پیک کو دوبارہ فعال کریں گے اور پلاننگ کمیشن کو اسد عمر کی نالائقیوں سے پہنچنے والے نقصان کا ازالہ کریں گے، مسلم لیگ ن کو نیازی کی تمام ٹیم میں سے ایک شخص کو ضرور جاری رکھنا چاہیے، اور وہ ہے ارشد ملک جسے مسلم لیگ ن سپورٹ کرکے پی آئ اے کو دوبارہ کھڑا کر سکتی ہے، اس کے علاوہ تمام اداروں سے نالائق ترین چیف ایگزیکٹو ھنگامی بنیادوں پر بدلنے ہوں گے- پی ٹی وی سے فواد چودھری کے سالے کو نکالنا ہو گا، جس کی لاٹری فواد چودھری نے نکالی، رنگ روڈ سکینڈل اور دوسرے کرپشن کے کیسز کو کھولنا ہوگا، امین اسلم کے بلین ٹری پراجیکٹس میں بہت گھپلے ہیں۔

Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments

Read more

نواز شریف کو سی پیک بنانے کے جرم کی سزا دی گئی

نواز شریف کو ایوانِ اقتدار سے بے دخل کرنے میں اس وقت کی اسٹیبلشمنٹ بھرپور طریقے سے شامل تھی۔ تاریخی شواہد منصہ شہود پر ہیں کہ عمران خان کو برسرِ اقتدار لانے کے لیے جنرل باجوہ اور جنرل فیض حمید نے اہم کردارادا کیا۔

ثاقب نثار کے جرائم

Saqib Nisar, the former Chief Justice of Pakistan, is the "worst judge in Pakistan's history," writes Hammad Hassan.

عمران خان کا ایجنڈا

ہم یہ نہیں چاہتے کہ ملک میں افراتفری انتشار پھیلے مگر عمران خان تمام حدیں کراس کر رہے ہیں۔

لوٹ کے بدھو گھر کو آ رہے ہیں

آستین میں بت چھپائے ان صاحب کو قوم کے حقیقی منتخب نمائندوں نے ان کا زہر نکال کر آئینی طریقے سے حکومت سے نو دو گیارہ کیا تو یہ قوم اور اداروں کی آستین کا سانپ بن گئے اور آٹھ آٹھ آنسو روتے ہوئے ہر کسی پر تین حرف بھیجنے لگے۔

حسن نثار! جواب حاضر ہے

Hammad Hassan pens an open letter to Hassan Nisar, relaying his gripes with the controversial journalist.

#JusticeForWomen

In this essay, Reham Khan discusses the overbearing patriarchal systems which plague modern societies.
error: