spot_img

Columns

Columns

News

پاک فوج نے جنرل (ر) فیض حمید کے خلاف انکوائری کا آغاز کر دیا

پاک فوج نے سابق ڈائریکٹر جنرل آئی ایس آئی جنرل (ر) فیض حمید کے خلاف نجی ہاوسنگ سوسائٹی کے مالک کی درخواست پر انکوائری کا آغاز کر دیا ہے، جنرل (ر) فیض حمید پر الزام ہے کہ انہوں نے نجی ہاؤسنگ سوسائٹی کے خلاف دورانِ ملازمت اپنے اختیارات کا ناجائز استعمال کیا تھا۔

عمران خان کی حکومت سعودی عرب نے گِرائی تھی، شیر افضل مروت

عمران خان کی حکومت سعودی عرب نے گِرائی تھی، سعودی عرب اور امریکہ دو ممالک تھے جن کے تعاون سے رجیم چینج آپریشن مکمل ہوا، سعودی عرب کی جانب سے پاکستان کیلئے معاشی تعاون بھی اسی پلاننگ کا حصہ ہے۔راہنما تحریکِ انصاف شیر افضل مروت

فیض آباد دھرنا کمیشن ایک مذاق تھا، اس کمیشن کی کوئی وقعت نہیں ہے۔ وزیرِ دفاع خواجہ آصف

جنرل (ر) باجوہ نے مجھے دھمکی دی ہے کہ میں نے باتیں بیان کیں تو ٹانگوں پر کھڑا نہ ہو سکوں گا، جنرل (ر) باجوہ اور جنرل (ر) فیض حمید فیض آباد دھرنا کمیشن میں پیش نہیں ہوئے، فیض آباد دھرنا کمیشن ایک مذاق تھا، اس کمیشن کی کوئی وقعت نہیں ہے۔

سعودی عرب پاکستان کی معاشی ترقی کیلئے اپنا کردار ادا کرے گا، سعودی وزیرِ خارجہ شہزادہ فیصل

سعودی عرب پاکستان کی معاشی ترقی کیلئے اپنا کردار ادا کرے گا، جلد سرمایہ کاری میں پیش رفت ہو گی۔ سعودی وزیرِ خارجہسعودی عرب کی جانب سے بڑی سرمایہ کاری کا خیر مقدم کرتے ہیں، سعودی سرمایہ کاروں کو تمام سہولیات فراہم کی جائیں گی۔ وزیرِ خارجہ اسحاق ڈار

جنرل (ر) باجوہ میرے خلاف ہیروئن کے جعلی کیس میں براہِ راست ملوث تھا، رانا ثناء اللّٰہ

میرے خلاف ہیروئن کے جعلی کیس میں جنرل (ر) قمر جاوید باجوہ براہِ راست ملوث تھا، عمران خان نے پارلیمنٹ کی منظوری کے بغیر اگست میں ہی جنرل (ر) باجوہ کو توسیع دے دی تھی، میاں نواز شریف نے کہا کہ اب محاذ آرائی بےسود ہے۔
Opinionلائٹس، گوگی، ایکشن
spot_img

لائٹس، گوگی، ایکشن

عالم پناہ اپنی تیوری چڑھا کر ملکہ عالیہ کیطرف نظر اٹھاتے ہیں تو حجاب میں لپٹی ملکہ آستانہ عالیہ بادشاہ سلامت کے کان میں سرگوشی کرتے فرماتی ہیں مولا خوش رکھے آپ ہی نے تو گوگی کو معاملات طے کرنا بھیجا ہے۔

Raza Butt
Raza Butt
Raza Butt is the editor of The Thursday Times.
spot_img

بادشاہ سلامت کا دربار لگا ہوا ہے ہرکارے اندر باہردوڑ رہے ہیں دوپہر ڈھلنے کو ہےاور بادشاہ سلامت کی آمد کا انتظار ہے یکایک صدا بلند ہوتی ہے

خبردار ہوشیار

بھاگ لگے رہن

مولا خوش رکھے

بادشاہ سلامت آخر کار تشریف لاتے ہیں

شلوار قمیض (جس میں موریاں ہیں) میں ملبوس پاوں میں کھیڑی پہنے بادشاہ سلامت بوٹاکس سے لتھڑے چہرے اور ٹرانسپلانٹ کیے گئے بالوں کیساتھ عمر رفتہ کو آواز دیتے ہوئے لائٹس کے جھرمٹ میں اپنی ملکہ آستانہ عالیہ کیساتھ تشریف لے آتے ہیں

دربار کی کاروائی کا آغاز ہوتا ہے بادشاہ سلامت آتے ہی لائٹنگ کی طرف اشارہ کرکے کہتے ہیں لائٹ تو ٹھیک ہے نا اور پھر پوچھتے ہیں کہ ہماری کنیز خاص الخاص کدھر گئی ہیں جواب ملتا ہے عالم پناہ وہ ملکہ عالیہ کے ایک خاص مشن پرصوبہ سرزمین پنج آب کے وزیر خاص کے ہمراہ کسی خاص ڈیلنگز میں مصروف ہیں

 جواب سن کر عالم پناہ اپنی تیوری چڑھا کر ملکہ عالیہ کیطرف نظر اٹھاتے ہیں تو حجاب میں لپٹی ملکہ آستانہ عالیہ بادشاہ سلامت کے کان میں سرگوشی کرتے فرماتی ہیں مولا خوش رکھے آپ ہی نے تو گوگی کو معاملات طے کرنا بھیجا ہے یہ سنتے ہی عالم پناہ خوشی اورغصہ کے مدھر جذبات کیساتھ جلال میں آجاتے ہیں اور لائٹس کی چکا چوند میں حکم صادر فرماتے ہیں کہ کنیز خاص گوگی کو فوری حاضر کیا جائے

ہرکارے دوڑتے ہیں اور گوگی کو بلایا جاتا ہے گوگی دوڑتی کانپتی بادشاہ سلامت کی خدمت میں حاضر ہوتی ہے تو اس سے سوال ہوتا ہے کنیز خاص تم کس کی اجازت سے محل سے باہرگئی تھیں تو جواب ملتا ہے

میں نئیں بولدی

میرے اچ میرا یار بولدا

دیہاڑی لگ گئی جے

یہ سنتے ہی عالی جاہ کا مدھرجلال غائب ہوجاتا ہے اور چہرے پر ایک مسکراہٹ فاتحانہ نمودار ہوجاتی ہے

فوری دربار سمیٹنے کا اور لائٹیں بجھانے کا حکم دیکر کہا جاتا ہے کہ بس آج کیلئے اتنی کاروائی بہت ہے اب بادشاہ سلامت کے ریلیکس ہونے کا وقت ہوگیا ہے

عین اسی وقت پانی سے چلنے والے ہیلی کاپٹر کے پنکھوں کی پھرپھراہٹ سنائی دیتی ہے اور بادشاہ سلامت ایک مرتبہ پھر موریوں والی قمیض زیب تن کیے ہوئے اپنے پورے جاہ و جلال سے ہیلی کاپٹر کی طرف چل پڑتے ہیں

:ہرکارے آواز لگاتے ہیں

جاگدے رہنا

ساڈے تے نہ رہنا

دیہاڑی لگ گئی جے

چوری دا مال تے ڈانگاں دے گز

مولا خوش رکھے

بھاگ لگے رہن

Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments

Read more

نواز شریف کو سی پیک بنانے کے جرم کی سزا دی گئی

نواز شریف کو ایوانِ اقتدار سے بے دخل کرنے میں اس وقت کی اسٹیبلشمنٹ بھرپور طریقے سے شامل تھی۔ تاریخی شواہد منصہ شہود پر ہیں کہ عمران خان کو برسرِ اقتدار لانے کے لیے جنرل باجوہ اور جنرل فیض حمید نے اہم کردارادا کیا۔

ثاقب نثار کے جرائم

Saqib Nisar, the former Chief Justice of Pakistan, is the "worst judge in Pakistan's history," writes Hammad Hassan.

عمران خان کا ایجنڈا

ہم یہ نہیں چاہتے کہ ملک میں افراتفری انتشار پھیلے مگر عمران خان تمام حدیں کراس کر رہے ہیں۔

لوٹ کے بدھو گھر کو آ رہے ہیں

آستین میں بت چھپائے ان صاحب کو قوم کے حقیقی منتخب نمائندوں نے ان کا زہر نکال کر آئینی طریقے سے حکومت سے نو دو گیارہ کیا تو یہ قوم اور اداروں کی آستین کا سانپ بن گئے اور آٹھ آٹھ آنسو روتے ہوئے ہر کسی پر تین حرف بھیجنے لگے۔

حسن نثار! جواب حاضر ہے

Hammad Hassan pens an open letter to Hassan Nisar, relaying his gripes with the controversial journalist.

#JusticeForWomen

In this essay, Reham Khan discusses the overbearing patriarchal systems which plague modern societies.
error: