spot_img

Columns

News

پاک فوج نے جنرل (ر) فیض حمید کے خلاف انکوائری کا آغاز کر دیا

پاک فوج نے سابق ڈائریکٹر جنرل آئی ایس آئی جنرل (ر) فیض حمید کے خلاف نجی ہاوسنگ سوسائٹی کے مالک کی درخواست پر انکوائری کا آغاز کر دیا ہے، جنرل (ر) فیض حمید پر الزام ہے کہ انہوں نے نجی ہاؤسنگ سوسائٹی کے خلاف دورانِ ملازمت اپنے اختیارات کا ناجائز استعمال کیا تھا۔

عمران خان کی حکومت سعودی عرب نے گِرائی تھی، شیر افضل مروت

عمران خان کی حکومت سعودی عرب نے گِرائی تھی، سعودی عرب اور امریکہ دو ممالک تھے جن کے تعاون سے رجیم چینج آپریشن مکمل ہوا، سعودی عرب کی جانب سے پاکستان کیلئے معاشی تعاون بھی اسی پلاننگ کا حصہ ہے۔راہنما تحریکِ انصاف شیر افضل مروت

فیض آباد دھرنا کمیشن ایک مذاق تھا، اس کمیشن کی کوئی وقعت نہیں ہے۔ وزیرِ دفاع خواجہ آصف

جنرل (ر) باجوہ نے مجھے دھمکی دی ہے کہ میں نے باتیں بیان کیں تو ٹانگوں پر کھڑا نہ ہو سکوں گا، جنرل (ر) باجوہ اور جنرل (ر) فیض حمید فیض آباد دھرنا کمیشن میں پیش نہیں ہوئے، فیض آباد دھرنا کمیشن ایک مذاق تھا، اس کمیشن کی کوئی وقعت نہیں ہے۔

سعودی عرب پاکستان کی معاشی ترقی کیلئے اپنا کردار ادا کرے گا، سعودی وزیرِ خارجہ شہزادہ فیصل

سعودی عرب پاکستان کی معاشی ترقی کیلئے اپنا کردار ادا کرے گا، جلد سرمایہ کاری میں پیش رفت ہو گی۔ سعودی وزیرِ خارجہسعودی عرب کی جانب سے بڑی سرمایہ کاری کا خیر مقدم کرتے ہیں، سعودی سرمایہ کاروں کو تمام سہولیات فراہم کی جائیں گی۔ وزیرِ خارجہ اسحاق ڈار

جنرل (ر) باجوہ میرے خلاف ہیروئن کے جعلی کیس میں براہِ راست ملوث تھا، رانا ثناء اللّٰہ

میرے خلاف ہیروئن کے جعلی کیس میں جنرل (ر) قمر جاوید باجوہ براہِ راست ملوث تھا، عمران خان نے پارلیمنٹ کی منظوری کے بغیر اگست میں ہی جنرل (ر) باجوہ کو توسیع دے دی تھی، میاں نواز شریف نے کہا کہ اب محاذ آرائی بےسود ہے۔
spot_img
NewsroomInternationalنریندر مودی بطور وزیرِاعلیٰ گجرات مسلمانوں کے قتلِ عام کی نگرانی کرتا...

نریندر مودی بطور وزیرِاعلیٰ گجرات مسلمانوں کے قتلِ عام کی نگرانی کرتا رہا، خواجہ آصف

پاکستان کئی دہائیوں سے مسلسل دہشتگردی کے خلاف جنگ لڑ رہا ہے اور اس جنگ میں لاکھوں جانیں گنوا چکا ہے جو خطہ میں ناکام امریکی مداخلت کی وجہ سے پیدا ہوئی۔

spot_img

واشنگٹن/اسلام آباد—وائٹ ہاؤس میں امریکی صدر جوبائیڈن اور بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کی ملاقات کے بعد دونوں سربراہانِ مملکت کی جانب سے ایک مشترکہ بیانیہ جاری کیا گیا ہے جس کے مطابق امریکہ اور ہندوستان عالمی دہشتگردی کا مقابلہ کرنے کیلئے ایک ساتھ کھڑے ہیں اور دہشتگردی اور پرتشدد انتہا پسندی کی تمام شکلوں اور مظاہر کی واضح طور پر مذمت کرتے ہیں۔

امریکی صدر جوبائیڈن اور بھارتی وزیراعظم نریندر مودی نے اقوامِ متحدہ کی فہرست میں شامل تمام دہشت گرد گروپس بشمول القاعدہ، داعش، لشکرِ طیبہ اور جیشِ محمد کے خلاف ٹھوس کارروائی کے مطالبے کا اعادہ کیا، انہوں نے سرحد پار دہشت گردی اور دہشت گرد پراکسیز کے استعمال کی شدید مذمت کی اور پاکستان سے مطالبہ کیا کہ وہ اس بات کو یقینی بنانے کیلئے فوری کارروائی کرے کہ اس کے زیرِ انتظام کوئی بھی علاقہ دہشت گردانہ حملوں کیلئے استعمال نہ ہو گا۔

دونوں سربراہانِ مملکت نے پاکستان سے ممبئی اور پٹھان کوٹ حملوں کے مجرموں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کا مطالبہ کیا اور دہشت گردی کے مقاصد کیلئے پائلٹ کے بغیر فضائی گاڑیوں (UAVs)، ڈرونز اور انفارمیشن اینڈ کمیونیکیشن ٹیکنالوجیز کے بڑھتے ہوئے عالمی استعمال پر بھی تشویش کا اظہار کیا اور ان عوامل سے نمٹنے کیلئے مل کر کام کرنے کی اہمیت کا اعادہ کیا۔

پاکستانی وزیرِ دفاع خواجہ آصف کا ردعمل

پاکستان کے وزیرِ دفاع خواجہ آصف نے امریکہ اور بھارت کی جانب سے جاری کیے گئے مشترکہ اعلامیہ پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایک بیان کی شکل میں یہ ستم ظریفی اس وقت سامنے آئی ہے جب ایک ایسا شخص امریکہ کا دورہ کر رہا ہے کہ جب وہ گجرات کا وزیرِ اعلیٰ تھا تو اس پر مسلمانوں کے قتلِ عام کی نگرانی کی وجہ امریکہ میں داخلے پر پابندی لگا دی گئی تھی اور وہ آج کشمیر میں ریاستی سرپرستی کے ساتھ دہشتگردی کی ایک ایسی مہم کی قیادت کر رہا ہے جس میں مقامی لوگوں کو معذور اور اندھا بنایا جا رہا ہے جبکہ بھارت کے مختلف حصوں میں مودی کے حواری مسلمانوں، عیسائیوں اور دیگر مذہبی اقلیتوں کو بدترین تشدد کا نشانہ بنا رہے ہیں۔

خواجہ آصف نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں کہا کہ پاکستان کئی دہائیوں سے مسلسل دہشتگردی کے خلاف جنگ لڑ رہا ہے اور اس جنگ میں لاکھوں جانیں گنوا چکا ہے جو خطہ میں ناکام امریکی مداخلت کی وجہ سے پیدا ہوئی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ امریکی صدر جوبائیڈن کو ان حقائق پر غور کرنا چاہیے۔

امریکہ میں بھارتی وزیراعظم کے خلاف احتجاج

بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کی وائٹ ہاؤس میں امریکی صدر جوبائیڈن سے ملاقات کے دوران وائٹ ہاؤس کے باہر بھارت میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کے خلاف بھارتی شہریوں کی بہت بڑی تعداد احتجاج کرتی رہی جبکہ احتجاج کرنے والوں میں سکھ کمیونٹی کے لوگ بھی شریک تھے، شرکاء نے “گو بیک مودی” اور “انڈیا شیم شیم” کے نعرے لگائے۔

بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کو امریکی ارکانِ کانگریس کی جانب سے بھی احتجاج کا سامنا رہا اور نریندر مودی نے امریکی صدر جوبائیڈن سے ملاقات کے بعد کانگریس کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کیا تو ڈیموکریٹک پارٹی کے 6 ارکان نے تقریر کا بائیکاٹ کیا اور بھارتی وزیراعظم کو شدید تنقید کا بھی نشانہ بنایا۔

بائیکاٹ کرنے والے ارکانِ کانگریس کا کہنا تھا کہ نریندر مودی کی حکومت بھارت میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں، غیر جمہوری اقدامات، مذہبی و نسلی اقلیتوں کو نشانہ بنانے اور صحافتی پابندیاں عائد کرنے میں ملوث ہے۔

Read more

میاں نواز شریف! یہ ملک بہت بدل چکا ہے

مسلم لیگ ن کے لوگوں پر جب عتاب ٹوٹا تو وہ ’نیویں نیویں‘ ہو کر مزاحمت کے دور میں مفاہمت کا پرچم گیٹ نمبر 4 کے سامنے لہرانے لگے۔ بہت سوں نے وزارتیں سنبھالیں اور سلیوٹ کرنے ’بڑے گھر‘ پہنچ گئے۔ بہت سے لوگ کارکنوں کو کوٹ لکھپت جیل کے باہر مظاہروں سے چوری چھپے منع کرتے رہے۔ بہت سے لوگ مریم نواز کو لیڈر تسیلم کرنے سے منکر رہے اور نواز شریف کی بیٹی کے خلاف سازشوں میں مصروف رہے۔

Celebrity sufferings

Reham Khan details her explosive marriage with Imran Khan and the challenges she endured during this difficult time.

نواز شریف کو سی پیک بنانے کے جرم کی سزا دی گئی

نواز شریف کو ایوانِ اقتدار سے بے دخل کرنے میں اس وقت کی اسٹیبلشمنٹ بھرپور طریقے سے شامل تھی۔ تاریخی شواہد منصہ شہود پر ہیں کہ عمران خان کو برسرِ اقتدار لانے کے لیے جنرل باجوہ اور جنرل فیض حمید نے اہم کردارادا کیا۔

ثاقب نثار کے جرائم

Saqib Nisar, the former Chief Justice of Pakistan, is the "worst judge in Pakistan's history," writes Hammad Hassan.

عمران خان کا ایجنڈا

ہم یہ نہیں چاہتے کہ ملک میں افراتفری انتشار پھیلے مگر عمران خان تمام حدیں کراس کر رہے ہیں۔

لوٹ کے بدھو گھر کو آ رہے ہیں

آستین میں بت چھپائے ان صاحب کو قوم کے حقیقی منتخب نمائندوں نے ان کا زہر نکال کر آئینی طریقے سے حکومت سے نو دو گیارہ کیا تو یہ قوم اور اداروں کی آستین کا سانپ بن گئے اور آٹھ آٹھ آنسو روتے ہوئے ہر کسی پر تین حرف بھیجنے لگے۔

حسن نثار! جواب حاضر ہے

Hammad Hassan pens an open letter to Hassan Nisar, relaying his gripes with the controversial journalist.

#JusticeForWomen

In this essay, Reham Khan discusses the overbearing patriarchal systems which plague modern societies.
spot_img
Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments
error: